67

انرجی ڈرنکس آپ کے جگر کو تباہ کر سکتیں ہیں. نئی تحقیق

فلوریڈا میں کی گئی ایک تحقیق سے پتا چلا کہ، خود کوک چاک و چوبند رکھنے کی گرز سے انرجی ڈرنکس پینا، اپنی صحت اپنے ہاتھ سے خراب کرنا ہے. کیوں کی انرجی ڈرنکس کی وجہ سے نا صرف جگر متاثر ہو سکتا ہے، بلکہ اس سے ہیپاٹائٹس کا بھی شدید خطرہ ہو سکتا ہے.
تفصیلات کے مطابق، فلوریڈا میں ایک 50 سالہ شخص نے ہسپتال میں پسلیوں سے لے کر ناف تک کے حصے میں شدید تکلیف کی شکایت کی، اور بتایا کہ اسے متلی، بھوک میں‌کمی، الٹی جیسی کیفیات بھی ہوتی ہیں. یہ ساری علامات اکیوٹ ہیپاٹاٹیس کی تھیں ، جو کہ جگر کی ایک ایسی بیماری ہے جس سے موت ہونے کے بھی کافی مواقع ہوتے ہیں. جب اس شخص سے تفصیلات حاصل کی گئیں تو اس نے بتایا کہ اس نے پچھلے کئی ہفتوں میں کوئی بھی نشہ آور چیز استعمال نہیں کی تھی. لیکن پچھلے 3،4 ہفتوں سے وہ کام زیادہ ہونے کی وجہ سے انرجی ڈرنکس لازمی پیتا تھا.
انرجی ڈرنک کے ہر ڈبے میں‌250ملی لیٹر انرجی ڈرنک ہوتی ہے تقریباُ، اور وہ مریض 4 سے 5 ڈبے لازمی پیتا تھا.
جب اس کا تفصیلی ٹیسٹ کیا گیا تو پتا چلا کہ اس کو نا صرف ہیپاٹائٹس ہے بلکہ کرونک ہیپاٹائتس سی بھی لاحق ہے، یعنی کہ وہ جگر کی دو شدید بیماریوں میں مبتلا ہو چکا تھا.
اس کی بیماریوں کا تمام طرح سے جائزہ لینے کے بعد ماہرین اس نتیجہ پر پہنچے کہ اس کی بیماری کی اصل وجہ، وٹامن بی 3، جسے نیاسن بھی کہا جاتا ہے، تھی. جس کی بڑی مقدار انرجی ڈرنک میں موجود ہوتی ہے.
اس شخص نے اتنے دن جو انرجی ڈرنکس لی تھی، ان میں موجود نیاسن نے مل کر اس کے جگر کو دو شدید بیماریوں میں مبتلا کر دیا. اس لیے ماہرین اور ڈاکٹرز نے انرجی ڈرنکس کی زیادہ مقدار، زیادہ دن تک لینے سے منع کیا ہے.

کیٹاگری میں : صحت

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں