77

کون کہتا کہ بلی کا کوئی فائدہ نہیں ہے؟ بھارت میں‌اب بلی کا گوشت بھی فروخت ہونے لگا.

بھارت کے شہر چینائی میں بلیوں کو ابال کر، اور وہ بھی زندہ ابال کر ان کی بریانی پکا کر فروخت کرنے کا اسکینڈل سامنے آیا ہے.
تفصیلات کے مطابق، بھارت کے ایک شہر چینائی کے علاقے پاورام میں ایک سکینڈل سامنے آیا، کہ کئی دکانوں پر بلیوں کو زندہ ابال کر، ان کو پکا کر، اس کی بریانی فروخت کی جاتی ہے. اس غیر انسانی سکینڈل پر، پولیس نے ایکشن لیا، اور مختلف دکانوں پر چھاپے مارے، جس کے نتیجے میں کھانے کی دکانوں سے پنجروں میں‌بند 16 بلیاں برآمد کی ہیں. جن میں سے کئی بلیوں کے جسم پر زخم بھی تھے، جو ممکنہ طور پر انھیں پکڑنے کے نتیجے میں ان کے جسم پر آئے تھے.
اس کاروبار کے شروع ہونے کو بعد جانوروں کے حقوق پر کام کرنے والی ایک تنظیم پی ایف اے نے خفیہ کیمرا لگا کر، بلیوں کو ذبح کرنے کی ویڈیو بنا لی، اور اس غیر انسانی سلوک کی ویڈیو پولیس کو دے دی، جس کے بعد پولیس حرکت میں آئی، اور چھاپے مارے کر دکانداروں کو گرفتار کر لیا.
پلارام پولیس اسٹیشن نے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ اس علاقے کے کئ لوگوں نے اپنی بلیاں غائب ہو جانے کی شکایت کی تھی، جس کے بعد مٹن فروخت کرنے والی دکانوں پر چھاپے مارے گئے.
دکانوں سے بازیاب ہونے والی بلیوں کو ابھی پی ایف اے میں ہی رکھا گیا ہے، جن کی حالت تاحال بہت بری ہے، کیوں کہ ان میں سے کئی ایک ناسور زدہ ذخم ہیں، پی ایف اے کے ایک اہلکار نے مزید انکشاف کیا کہ نزدیک ہی ایک علاقے چنائے میں‌رہنے والا ایک خانہ بدوش گروہ بلیوں کا گوشت بہت شوق سے کھاتا ہے، تاہم یہ بھی خدشہ ہے کہ، بلیوں کا گوشت مارکیٹ میں بھی 60 روپے فی کلو کے حساب سے سیل کیا جاتا ہے. اس بارے میں مزید تحقیقات جاری ہیں.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں