47

بھارت کے نئے نئے ایٹمی معاہدے، اب جاپان میں‌بھی نیو کلیئر تعاون کا معاہدہ

جاپانی کمپنیاں ایٹمی پلانٹ لگا سکیں گی، چین نے تحفظات دے دیے. ٹوکیو سے ایٹمی توانائی پیدا کرنے کے لیے، ہندوستان کو ٹیکنالوجی، آلات اور ایندھن برآمد کر سکے گا. اور اگر جاپان میں‌نیوکلیئر ہتھیار کا تجربہ کیا گیا، تو جاپان کو اختیار ہو گا، کہ وہ ڈیل ختم یا کینسل کر دے.
مزید تفصیلات کے مطابق، پچھلے کئی دن سے التوا میں‌پڑے ہوئے جوہری منصوبے پر، جمعہ کے روز ٹوکیو میں انڈیا نے بھی دستخط کر دیے، جس کی رو سے، انڈیا کو ایٹمی توانائی پیدا کرنے کے لیے، ٹوکیو ٹیکنالوجی اور ایٹمی ایندھن اور آلات بھی برآمد کر سکے گا. معاہدہ میں یہ بھی لکھا گیا ہے کہ، جوہری آلات اور ایندھن صرف پرامن مقاصد کے لیے ہی استعمال کیا جائے گا. اور اگر انڈیا، جوہری تجربہ کرتاہے تو، جاپان کو اختیار ہوگا کہ، وہ ہی معاہدہ منسوح یا ختم کر دے. جاپان کی ہسٹری میں ایسا پہلی بار ہوا ہے کہ، اس نے این پی ٹی پر دستخط نا کرنے والے ملک کے ساتھ جوہری تعاون کا سول معاہدہ کیا ہے.
اس معاہدہ پر جمہ کے روز جاپانی وزیر اعظم نے دستخط کیے، اور بعد ازاں ہندوستان وزیراعظم نے بھی اس پر دستخط کیے.
معاہدہ کے بعد ایک مشترکہ پریس کانفرنس نے خطاب کرتے ہوئے، دونوں وزرا اعظم کا کہنا تھا کہ، اس معاہدے کا مقصد، پر امن مقاصد ہیں اور وہ خطے میں امن چاہتے ہیں.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں