32

کراچی سے لاہور کا سفر صرف ایک گھنٹے میں، وہ بھی “ہائپر لوپ” ٹرین پر، ہوا میں معلق ہو کر.

دبئی نت نئی لگژری چیزوں کی آماجگاہ ہے، لیکن اب کی بار باری ہے، دنیا کی تیز ترین ٹرین بنانے کی، جو کہ کرے گی، کراچی سے لاہور صرف ایک گھنٹے میں سفر. جی ہاں! دبئی سے ابوظہی، صرف لگیں‌گے 12 منٹ. اور یہی نہیں، ٹرین میں مزے لیجیے، فضاء میں سفر کے، کیوں کہ یہ ٹرین ہوا میں معلق ہو کر سفر کرنے والی ہے.
prt-grt_007rs2
تفصیلات کے مطابق: دبئی حکومت نے ایک ایسی ٹرین کا تصور پیش کیا ہے، جس کا تصور ایک عرب پتی موجد، جو کہ امریکہ سے تعلق رکھتے ہیں، ایلن میوسک نے پیش کیا تھا. یہ ٹرین پٹری پر نہیں بلکہ، مقناطیسی سرنگوں سے گزرے گی، جنہیں پوڈز کا نام دیا گیا ہے. اس تصور کے بعد اس میں کروڑوں ڈالرز کی سرمایا کاری بھی کی جارہی ہے. اس ضمن میں‌دبئی حکومت پیش پیش ہے. یہ ٹرین مقناطیسی سرنگوں سے گزرتی ہوئی، 1100 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے سفر کریگی. اس ٹرین کو ہائپر لوپ ٹرین کا نام دیا گیا ہے، جسے ہائپر لوپ نامی کمپنی بنانے والی ہے، اس کمپنی نے فن لینڈ اور ڈنمارک حکومت سے بھی اس ٹرین کے لیے معاہدے کر رکھے ہیں.
کمپنی کو یقین ہے کہ اگلے سال تک ان کا کام مکمل ہو جائے گا اور امریکی ریگستانوں میں‌اس کا پہلا ٹیسٹ کیا جائے گا. اب تک اس کمپنی میں اس مقصد کے لیے 16 کروڑ ڈالر، یعنی 16 ارب روپے کی سرمایا کاری بھی کی جا چکی ہے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں