pakistan ban on open sale of cigarette 36

حکومت کا کھُلی سگریٹ کی فروخت پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ

تمباکو نوشی کرنے والے افراد کے لیے بُری خبر حکومت کا اعلان ملک بھر میں کھُلے سگریٹ کی فروخت پر مکمل پابندی عائد ہو گی۔حکومت کی جانب سے یہ کہا گیا کہ یہ فیصلہ نوجوانوں میں سگریٹ نوشی کی حوصلہ شکنی کرنے کے لیے کیا گیا. پابندی تمباکو نوشی آرڈیننس کے تحت عائد کی جا رہی ہے۔اس سلسلے میں وزارت قومی صحت کی جانب سے جلد ہی پابندی کا نوٹی فکیشن بھی جاری کیا جائے گا۔ نوٹی فکیشن میں تمام صوبوں میں سگریٹ کی فروخت پر پابندی کے فیصلے پر مکمل عملدرآمد کروایالگا جائے گا۔ 2001 میں بھی 10 سگریٹ والی ڈبیہ پر پابندی عائد کی گئی تھی۔حکومت کے اس فیصلے سے کسی مثبت اثرات کی توقع نہیں کی جانی چاہئے.لوگوں کو صرف سگریٹ کی ڈبی خریدنے کے لئے مجبور ہوجائیں گے.چھوٹی عمر سے تمباکو نوشی کے خطرات جیسے پھیپھڑوں کا کینسر اور دائمی کھانسی پر ہمارے عوام کو تعلیم دینے کی ضرورت ہے.جس پر حکومت کوئی توجہ نہیں دے رہی جس سے صاف یہ ظاہر ہوتا ہے کہ حقیقت میں حکومت کو نوجوانوں میں تمباکو نوشی ختم کرنے میں کوئی دلچسپی نہیں. حکومت کوچاہیے کہ صوبائی سطح پر عوامی مقامات میں سگریٹ نوشی پر پابندی عائد کی جائے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں