35

امریکی صدر ٹرمپ کے مالی امور کے خلاف تحقیقات کے لیے اتنی کالز کی گئی کے فون لائنز ہی جام ہوگئی.

فیس بک پر وائرل ہونے والی ایک پوسٹ کی وجہ سے حکومتی اصلاحاتی کمیٹی کو اتنی فون کالز آئیں کہ فون لائینز ہی جام ہوگئیں. حکومتی اصلاحاتی کمیٹی کو شدید مشکل کا سامنا کرنا پڑا جب تمام لائینز پر فون کالز کا تانتا بندھ گیا. دراصل ہوا یہ کہ کانگریس کی طرف سے فیس بک پر ایک پوسٹ کی گی، جس میں مطالبہ کیا گیا، کہ نئے منتخب ہونے والے صدر ٹرمپ کے مالی امور کی شفافیت کا جائزہ لیا جائے، اور اس پر تحقیقات کی جائیں. اس پوسٹ میں فیس بک یوزرز سے اپیل کی گئی تھی، کہ وہ تمام لوگ حکومتی اصلاحاتی کمیٹی کو فون کر کہ، تحقیقات کا مطالبہ کریں. پوسٹ کا وائرل ہونا تھا کہ، بس فون کالز کا تانتا بندھ گیا. اس پوسٹ میں کچھ اخلاقی سوالات بھی پوچھے گئے تھے کہ جس وقت صدر ٹرمپ جاپان کے وزیراعظم شنروادئے کے ساتھ ملاقات کر رہے تھے تو صدر ٹرمپ کی بیٹی وہاں کیا کر رہی تھی؟ جب کے صدر کی بیٹی کا سکیورٹی کلیئر بھی نہیں تھا. پوسٹ میں کمنٹ کرنے والوں نے اس رائے کا اظہار کیا تھا کہ، درحقیقت یہ ملاقات ملکی اور ریاستی امور کے متعلق تھی اور صدر کی بیٹی ایوانکا ٹرمپ اس ملاقات میں اپنے والد ٹرمپ کے دور صدارت کے دوران طے پانے والے کاروباری امور پر بات چیت کے لیے وہاں موجود تھی، تاہم اس تمام پوسٹ کے متعلق کوئی باضابطہ میڈیا رپورٹ تاحال دیکھنے میں نہیں آئی.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں